انتہائوں کے بیچ زندہ ہوں


انتہائوں      کے     بیچ     زندہ     ہوں

کچھ  خدائوں  کے  بیچ    زندہ     ہوں

کوئی      انساں     نظر     نہیں     آتا

بس  انائوں   کے    بیچ    زندہ    ہوں

داستانوں   میں   سنا    کرتے    تھے

جن   بلائوں   کے   بیچ   زندہ   ہوں

معجزہ    اور   کسے    کہتے   ہیں؟

بد   دعائوں   کے    بیچ    زندہ   ہوں

کل  مداروں  سے  دشمنی  کی  تھی

اب   خلائوں  کے  بیچ   زندہ   ہوں

نعیم    بینائی    چھن     گئی     میری

ضو  فشائوں  کے  بیچ   زندہ     ہوں

نعیم اکرم ملک

Advertisements

2 تبصرے

  1. اگست 1, 2011 بوقت: 10:10 صبح

    کوئی انساں نظر نہیں آتا
    بس انائوں کے بیچ زندہ ہوں

    بہت خوب

  2. مارچ 13, 2012 بوقت: 2:49 صبح

    بہت خوب جناب بہت خوب


جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s

%d bloggers like this: