بس عشق تیرے کا رونا ہے


بس عشق تیرے کا رونا ہے
اور   ہمیں   کیا   ہونا   ہے
کیا    پانا   کیا   کھونا   ہے
یہ  اوڑھنا،  یہی بچھونا ہے

تیری یادوں سے مہک رہا
کمرے  کا  کونا  کونا  ہے
اب کھیلتا ہے کل توڑے گا
دِل  اپنا  کوئی   کھلونا   ہے

تیرے آنسو ایسے موتی ہیں
ناممکن  جنہیں   پِرونا   ہے
چل نعیم نہیں کوئی اور سہی
تُو   ہو  جا  جسکا  ہونا  ہے

Advertisements

2 تبصرے

  1. اپریل 8, 2010 بوقت: 9:12 شام

    ڈیٹ فکس ہو گئی یعنی
    چلو جی اینج ای گزارا کرو
    اللہ صبر دے گا

  2. Nishant said,

    اپریل 17, 2010 بوقت: 9:11 صبح

    اب ہونے دو جو ہونا ہے
    کیا پانا ہے کیا کھونا ہے

    بہت بدھیا لکھا ہے بھی!


جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s

%d bloggers like this: